Aug
21

And now, the end is near,
And so I face the final curtain.
My friends, I’ll say it clear;
I’ll state my case of which I’m certain.

I’ve lived a life that’s full –
I’ve travelled each and every highway.
And more, much more than this,
I did it my way.

— My Way – Frank Sinatra

When God tells you its time to wind up…your healthy self thinks how? Then you think of what you must do before the rollover.. 🙂 and get on with doing it.

Anyways…I think I’ll become unapproachable…soon…so this is probably the last post…

See you later..
                                                         …much later..

For what is a man? What has he got?
If not himself – Then he has naught.
To say the things he truly feels
And not the words of one who kneels.
The record shows I took the blows
And did it my way.

Yes, it was my way.

— Frank Sinatra

… pray for me….and take care

Advertisements
Mar
17

A few weeks ago “Maulana” Fazlul Rehman had his heart op by Dr Mubashar (an Ahmadi). Here is the relevant post.

Now Ch. Shuajaat had his angioplasty from the same Dr Mubashar. Not only that, Ch Shujaat is also living at Dr Mubashar’s place these days and Muslim League (Q) guys had dinner at the same place.

Aren’t these Mullahs and politicians being hypocritical, on one hand not allowing Ahmadis on any Qaleede (key) positions and on the other hand trusting them with their own lives?

Below is the news as reported by Daily Jang.

چوہدری شجاعت حسین روبصحت، اسپتال سے گھر منتقل ہو گئے 
 
3/17/2007
 
واشنگٹن (جنگ نیوز) پاکستان مسلم لیگ کے صدر اور سابق وزیراعظم چوہدری شجاعت حسین مقامی اسپتال میں انجیو پلاسٹی کے بعد تیزی سے روبصحت ہیں اور وہ اسپتال سے ڈاکٹر مبشر کے گھر منتقل ہو گئے ہیں۔ ڈاکٹر مبشر نے گذشتہ روز چوہدری شجاعت حسین کے اعزاز میں اپنی رہائش گاہ پر عشائیہ دیا جس میں پاکستان مسلم لیگ امریکاکے صدر میاں ذاکر نسیم اور سیکرٹری جنرل سکندر عزیز کے علاوہ پاکستان کمیونٹی کی ممتاز شخصیات نے شرکت کی۔ 

Mar
05

New Pakistani Flag

Since we have virtually eliminated minorities from Pakistan we might as well remove the white area in our flag that supposedly represents them. The result is shown above and is obviously stunning, just as Pakistan is without minorities.

PS: The above is sarcasm as hopefully most people would have realised already.

Feb
26

اقبال تیرے دیس کا کیا حال سناوٰں

(امیر الاسلام ہاشمی)

دہقان تو مرکھپ گیا اب کس کو جگاوٰں
ملتا ہے کہاں خوشہٰ گندم کہ جلاوٰں
شاہین کا ہے گنبدشاہی پہ بسیرا
کنجشک فرومایہ کو اب کس سے لڑاوٰں
اقبال تیرے دیس کا کیا حال سناوٰں

ہر داڑھی میں تنکا ہے،ہر ایک آنکھ میں شہتیر
مومن کی نگاہوں سے بدلتی نہیں تقدیر
توحید کی تلوارسے خالی ہیں نیامیں
اب ذوق یقیں سے نہیں کٹتی کوئی زنجیر
اقبال تیرے دیس کا کیا حال سناوٰں

شاہیں کا جہاں آج گرگس کا جہاں ہے
ملتی ہوئی ملاّ سے مجاہد کی اذاں ہے
مانا کہ ستاروں سے بھی آگے ہیں جہاں اور
شاہیں میں مگر طاقت پرواز کہاں ہے
اقبال تیرے دیس کا کیا حال سناوٰں

مرمر کی سلوں سے کوئی بے زار نہیں ہے
رہنے کو حرم میں کوئی تیار نہیں ہے
کہنے کو ہر اک شخص مسلمان ہے،لیکن
دیکھو تو کہیں نام کو کردار نہیں ہے
اقبال تیرے دیس کا کیا حال سناوٰں

بیباکی و حق گوئی سے گھبراتا ہے مومن
مکاری و روباہی پہ اتراتا ہے مومن
جس رزق سے پرواز میں کوتاہی کا ڈرہو
وہ رزق بڑے شوق سے اب کھاتا ہے مومن
اقبال تیرے دیس کا کیا حال سناوٰں

پیدا کبھی ہوتی تھی سحر جس کی اذاں سے
اس بندہ مومن کو میں اب لاوٰں کہاں سے
وہ سجدہ زمیں جس سے لرز جاتی تھی یارو
اک بار تھا ہم چھٹ گئے اس بارگراں سے
اقبال تیرے دیس کا کیا حال سناوٰں

جھگڑے ہیں یہاں صوبوں کے ذاتوں کے نسب کے
اگتے ہیں تہ سایہٰ گل خار غضب کے
یہ دیس ہے سب کا مگر اس کا نہیں کوئی
اس کے تن خستہ پہ تو اب دانت ہیں سب کے
اقبال تیرے دیس کا کیا حال سناوٰں

محمودوں کی صف آج ایازوں سے پرے ہے
جمہور سے سلطانی جمہور ڈرے ہے
تھامے ہوئے دامن ہے یہاں پر جو خودی کا
مرمرکے جئے ہے کبھی جی جی کے مرے ہے
اقبال تیرے دیس کا کیا حال سناوٰں

دیکھو تو ذرا محلوں کے پردوں کو اٹھا کر
شمشیر و سناں رکھی ہیں طاقوں پہ سجا کر
آتے ہیں نظر مسند شاہی پہ رنگیلے
تقدیر امم سو گئی طاوٰس پہ آ کر
اقبال تیرے دیس کا کیا حال سناوٰں

مکاری و عیاری و غداری و ہیجان
اب بنتا ہے ان چار عناصر سے مسلمان
قاری اسے کہنا تو بڑی بات ہے یارو
اس نے تو کبھی کھول کے دیکھا نہیں قرآن
اقبال تیرے دیس کا کیا حال سناوٰں

کردار کا گفتار کا اعمال کا مومن
قائل نہیں ایسے کسی جنجال کامومن
سرحد کا ہے مومن کوئی بنگال کا مومن
ڈھونڈے سے بھی ملتا نہیں قرآن کا مومن
اقبال تیرے دیس کا کیا حال سناوٰں

Feb
26

Islamabad is the beautiful capital of Pakistan…perhaps the most beautiful capital in the world! Doesn’t hurt to be patriotic once in a while. 🙂

Now you can read a “tourist’s” view of the city. MQ has recently returned to the city after a long absence and puts down his impressions in this excellent article at All Things Pakistan.

Photo Credit: Unknown

Feb
23

 

Young Pakistani women dance to the beat of a drum during the colourful spring festival locally known as ‘bassant’ in Lahore, 17 February 2002. Thousands of kite lovers celebrated the famous and traditional Bassant Festival in Lahore by arranging parties and musical shows.

Credit: ThingsAsian

Feb
23

وسعت اللہ خان 2007-02-22, 12:54

blo_wusat_girl180.jpg11اگست 1947۔
آج کے بعد مملکتِ خداداد میں ہندو ہندو نہیں رہے گا۔ عیسائی عیسائی نہیں اور مسلمان مسلمان نہیں۔

مذہبی معنوں میں نہیں بلکہ سیاسی معنوں میں۔ ریاست کے نزدیک سب لوگ بلا امتیازِ مذہب و ملت برابر کے شہری ہوں گے۔

(قائداعظم کا آئین ساز اسمبلی سے خطاب)

1949
قرار دادِ مقاصد آئین کا حصہ بنا دی گئی جس کے تحت قرآن و سنت کے منافی قانون
سازی نہیں ہوگی۔ قانون سازی میں قران و سنت سے رہنمائی حاصل کی جائے گی۔

1970
سو سے زائد علما نے ذوالفقار علی بھٹو کو دائرہ اسلام سے خارج قرار دے دیا۔

1974
ذوالفقار علی بھٹو نے قادیانیوں کو اسلام سے خارج کردیا۔

1979
بھٹو کو پھانسی دینے والے جنرل ضیاالحق نے حدود آرڈینس کا اجرا کردیا۔ زنا آرڈیننس کے تحت زنا بالرضا اور بالجبر یکساں جرم ہوں گے۔عورت کی گواہی آدھی ۔توہین رسالت کے مرتکب افراد کو عمر قید ہوسکتی ہے

1984
شق 295 سی کے تحت توہینِ رسالت کے مرتکب کو سزائے موت ملے گی۔

1988
مولانا فضل الرحمان سمیت متعدد جئید علما نے عورت (بے نظیر بھٹو) کی حکمرانی کو غیر شرعی قرار دے دیا۔

99-1989
کشمیر اور افغانستان کے لئے نئی ریکروٹمنٹ، جہادی تنظیموں کا فروغ۔ شیعہ سنی عبادت گاہوں پر حملے۔ شیعہ سنی رہنماؤں اور عام لوگوں کے قتل کی لہر۔ توہین رسالت کے الزامات سے بری ہونے متعدد لوگوں کا قتل۔ اقلیتی عبادت گاہوں اور لوگوں پر حملے۔ طالبان کا کابل پر قبضہ۔ نواز شریف کا نفاذِ شریعت بل۔ جنرل مشرف کی آمد۔

6-2001
نائن الیون۔ طالبان حکومت کا خاتمہ۔ وزیرستان میں طالبان کے خلاف فوجی کاروائی۔ جہادی تنظیموں پر پابندی۔ مدرسوں کی رجسٹریشن۔ ایم ایم اے کی صوبائی حکومت۔ حسبہ بل۔ حقوقِ نسواں بل کی مزاحمت۔ نصابِ تعلیم میں تبدیلی کی کوشش اور مزاحمت۔ گرلز اسکولوں پر حملے۔ میوزک کی دوکانوں، کیبل ٹی وی، سی ڈیز کے جلانے کا رحجان۔ وزیرستان میں طالبان سے امن سمجھوتہ۔

2007
بے پردگی کے جرم میں چار ماڈل گرلز کے اعترافی قاتل مولوی محمد سرور نے عدالت سے بری ہونے کے بعد پنجاب کی سوشل ویلفئر کی وزیر ظلِ ہما عثمان کو قتل کردیا۔ باجوڑ میں پولیو کی ویکسینیشن کرنے والے ایک ڈاکٹر کا قتل۔ سوات اور دیگر علاقوں میں متعدد لوگوں نے اپنے بچوں کی پولیو ویکسینیشن سے انکار کردیا۔ ایک عالم نے فتوی دیا ہے کہ بیماری سے پہلے اسکا علاج (یعنی ویکسینیشن) غیر شرعی ہے۔ وبا میں مرنے والا اللہ کے نزدیک شہید ہے۔

Moral of the Story
ہور چوپو

Credit: BBC Urdu

Feb
22

Lips(You’ve got to love this principal)

According to a news report, a certain private school in Washington was recently faced with a unique problem. A number of 12-year-old girls were beginning to use lipstick and would put it on in the bathroom. That was fine, but after they put on their lipstick they would press their lips to the mirror leaving dozens of little lip prints. Every night the maintenance man would remove them and the next day the girls would put them back.

Finally the principal decided that something had to be done. She called all the girls to the bathroom and met them there with the maintenance man.
She explained that all these lip prints were causing a major problem for the custodian who had to clean the mirrors every night (you can just imagine the yawns from the little princesses). To demonstrate how difficult it had been to clean the mirrors, she asked the maintenance man to show the girls how much effort was required.

He took out a long-handled squeegee, dipped it in the toilet, and cleaned the mirror with it.

Since then, there have been no lip prints on the mirror.

There are teachers…. and then there are educators.

Feb
13

Faiz AHmad FaizToday is Faiz Ahmad Faiz’s 96th birthday. If you, like me, feel indebted to him or are a fan of his poetry then please read this excellent post by Adil Najam on All things Pakistan. Happy birthday! Faiz.

!فيض سالگرہ مبارک

Feb
10

Munir NiaziMunir Niazi Gazal

 

Credit: LoveUrdu.com